پاکستان کرکٹ بورڈ کا نسلی تعصب کوڈ نافذ کرنے کا فیصلہ

لاہور: پاکستانی کپتان سرفراز احمد اور جنوبی افریقن کھلاڑی فیلوک وائیو کے تنازعہ کے بعد پاکستان کرکٹ بورڈ نے پاکستان کرکٹ میں انسداد نسل پرستی کوڈ متعارف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔

سرفراز احمد کی جانب سے فیلوک وائیو پر نسل پرستانہ جملے کسنے کے بعد لگائی جانے والی پابندی کو مدںظر رکھتے ہوئے پاکستان کرکٹ بورڈ نے عندیہ دیا تھا کہ بورڈ کھلاڑیوں کی اس ضمن میں تربیت کرے گا۔

اسی بیان کے تحت کرکٹ بورڈ نے پاکستان کرکٹ میں نسل پرستانہ کوڈ آف کنڈکٹ ناٖفذ کر دیا ہے جو کہ پاکستان سپر لیگ کی چوتھے سیزن سے نافذ العمل ہوگا۔


مزید پڑھیں

وزیراعظم عمران خان کا دستخط شدہ بلا 31 لاکھ میں نیلام


پاکستان کرکٹ کی تاریخ میں پہلی بار سلیکشن کمیٹی کے سربراہ انضمام الحق اورسلیکٹر وسیم حیدر کو بورڈ آف گورنرز اجلاس میں طلب کرکے سلیکشن معاملات پر سوال جواب کیے گئے اور کھلاڑیوں کے ساتھ ہونے والی نا انصافی پر بھی بات چیت کی گئی۔

پاکستان کرکٹ بور کے گورننگ بورڈ اجلاس کی جانب سے جاری اعلامیے میں نسلی امتیاز کوڈ کو پی ایس ایل فور میں نافذ کرنے کی منظوری کے علاوہ پی سی بی کے مالی معاملات کو شفاف بنانے کے لئے سہ ماہی فنانشنل رپورٹ جاری کرنے کا ٖفیصلہ بھی کیا گیا جب کہ معیاری کرکٹ کیلئے نئے ڈومیسٹک ڈھانچے میں ٹیموں کی تعداد کم کرنے کی تجویز بھی دی گئی ہے۔


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *