بجلی مہنگی نہیں کریں گے، حکومت کا آئی ایم ایف کو جواب

اسلام آباد: گزشتہ روز ویڈیو کانفرنس کے ذریعے آئی ایم ایف اور پاکستانی حکام کے درمیان ہونے والے مذاکرات کے دوسرے دور میں حکومت نے آئی ایم ایف کے مطالبے پر بجلی مزید مہنگی کرنے سے انکار کر دیا ہے۔


مزید پڑھیں

پاکستان نے معاشی ڈیٹا اکٹھا کرنے کے لیے ہمارا طریقہ کار اپنایا، آئی ایم ایف


پروپاکستانی اردو کو حاصل ہونے والی معلومات کے مطابق آئی ایم ایف کے ساتھ ہونے والے مذاکرات میں پاکستان نے موقف اختیار کیا کہ وہ فوری طور پر بجلی نرخوں اور ٹیکسوں میں اضافہ اور مالیاتی پالیسی کو سخت بنانے کی ضرورت محسوس نہیں کرتا۔

حکومت کی جانب سے یہ موقف ایک ایسے وقت میں اپنایا گیا جب چند روز قبل ہی بجلی مہنگی کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔ بجلی کی قیمتوں میں یہ اضافہ ایندھن کی قیمتوں کی مد میں کرنے کا کہا گیا ہے۔


مزید پڑھیں

آئی ایم ایف کے ساتھ بات چیت درست سمت نہیں جارہی، پاکستان


ذرائع کا کہنا ہے کہ مذاکرات میں حکومت نے شرح سود میں مزید اضافے کی بھی مخالفت کی جو کہ پہلے ہی 10.25 فیصد ہو چکی ہے۔

دوسری طرف آئی ایم ایف کا کہنا ہے کہ بجلی کے نرخوں اور ٹیکسوں میں حالیہ اضافہ اقتصادی عدم توازن کم کرنے کے لیے ناکافی ہے۔

مبصرین کا کہنا ہے کہ اس صورتحال کے بعد پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مئی تک کسی معاہدے تک پہنچے کا کوئی امکان نہیں ہے۔


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *