ڈیم فنڈ قوم کی امانت ہے، جس میں کوئی خیانت نہیں کر سکتا، سابق چیف جسٹس

کراچی: سابق چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ریٹائرڈ ثاقب نثار نے کہا ہے کہ ڈیم فنڈ قوم کی امانت ہے، اس میں کوئی خیانت نہیں کر سکتا، ڈیم فنڈ اکٹھا کرنے کے لیے بیرون ملک مزید دورے بھی کروں گا۔

کراچی کونسل آن فارن ریلیشن کے تحت مقامی ہوٹل کے سیمینار میں سابق چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ريٹائرڈ ثاقب نثار نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔

اس موقع پر اپنے خطاب میں میاں ثاقب نثار کا کہنا تھا کہ کبھی بھی عدليہ کو کسی چيز سے بری الذمہ قرار نہيں ديا، اٹھارويں ترميم بند کمروں ميں تيار ہوئی جس پر پارليمنٹ ميں کبھی بحث نہيں ہوئی۔


مزید پڑھیں

نیشنل ایکشن پلان کے تحت ملکی اور غیر ملکی این جی اوز کا سیکیورٹی آڈٹ شروع


سیاست میں آنے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ میں نے سیاست میں آنے کا کبھی نہیں سوچا، ڈیم فنڈ قوم کی ضرورت کے لیے قائم کیا، آج بھی ضرورت پڑی تو ڈیم فنڈ اکٹھا کرنے کے لیے بیرون ملک دورے کروں گا، ڈیم فنڈ کی ایک ایک پائی قوم کی امانت ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت پاکستان ڈیم فنڈ کا ایک روپیہ خرچ کرنے سے بھی پہلے سپریم کورٹ کو آگاہ کرے۔

ثانوی گفتگو میں سابق چیف جسٹس آف پاکستان جناب ثاقب نثار نے کہا کہ عجیب بات ہے کہ اٹھارویں ترمیم پر پارلیمنٹ میں کوئی بحث نا کی گئی، یہ ترمیم بند کمروں میں تیار کی گئی تھی۔


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *