بوکھلاہٹ کی شکار بھارتی حکومت نے پاکستان آرمی کے ترجمان کی پریس کانفرنس نشر کرنے پر 13 نیوز چینلز کو نوٹس جاری کردیے

نئی دہلی: ڈی جی آئی ایس پی آر جنرل آصف غفور کی پریس کانفرنس نشر کرنے پر بھارتی حکومت نے 13 ٹی وی چینلز کو شو کاز نوٹس جاری کر دیے۔

جن ٹی وی چینلز کو شو کاز نوٹس جاری کیے گئے ان میں کانگریسی لیڈر کپل سیبال کے “ترنگا ٹی وی” سمیت مختلف ریاستوں کے درجن بھر ٹی وی چینل شامل ہیں۔

14 فروری کو پلوامہ میں بھارتی فوج کے دستے پر خودکش حملے کے بعد بھارتی حکومت اس قدر بوکھلائی کہ بغیر تحقیقات اور بغیر سوچے سمجھے پاکستان پر اس حملے کا الزام لگا بیٹھی، جس کا پاکستان کی جانب سے اولین پالیسی بیان وزیراعظم پاکستان عمران خان کی جانب سے جاری ہوا، بعد ازاں ڈی جی آئی ایس پی آر کی جانب سے دنیا بھر کے میڈیا کو بھارتی جنگی جنون کے جواب میں تفصیلی بریفنگ دی گئی۔


مزید پڑھیں

جاپان کے بعد شاہ محمود قریشی کی چینی ہم منصب سے بھی بات چیت، خطے کی صورتحال پر موثر گفتگو


بھارت کے کئی چینلز نے پاکستان آرمی کے ترجمان کی پریس بریفنگ کو براہ راست نشر کیا، جس پر بھارتی حکومت اشتعال میں آ گئی اور اپنے ہی ٹی وی چینلز کو شو کاز نوٹس جاری کر دیے۔

جن ٹی وی چینلز کو شو کاز نوٹس جاری کیا گیا ان میں کپل سیبال کا ترنگا ٹی وی، اے پی نیوز، سریا سماچار، زی ہندوستان، ٹوٹل ٹی وی، اے بی پی، نیوز 18 لوکمت، جئے مہاراشٹر، نیوز 18 گجراتی، نیوز 24 اور سندیش نیوز شامل ہیں۔


مزید پڑھیں

مودی کو وزیراعظم عمران خان کا پیغام دیا ہے، اب ان کی جانب سے مثبت پیغام ہی آئے گا، رمیش کمار


واضح رہے کہ پاکستان آرمی کے ترجمان ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے پلوامہ حملے کے بعد لگائے جانے والے تمام الزامات کو رد کرتے ہوئے کہا تھا کہ حملہ آور کشمیری نوجوان تھا، حملے میں استعمال ہونے والی گاڑی بھارتی تھی، حملے میں استعمال شدہ بارود بھارتی ساختہ تھا، کشمیر لائن آف کنٹرول پر ان کی آبادی سے زیادہ بھارتی فوج تعینات ہے  تو پاکستان کس طرح اس حملے کا ذمہ دار ہے؟


Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *